سوئی ناردرن گیس پائپ لائنز لمیٹڈ
ہماری امید ... بہتر مستقبل ...

تعارف


کروژن کنٹرول

کروژن کنٹرول

محمد نصیر فیروز

جنرل منیجر ( کروژن کنٹرول )

کروژن کنٹرول ڈیپارٹمنٹ 35 افسران اور 179 ماتحت ملازمین پر مشتمل ہے اور یہ عملہ ہیڈآفس، 4 ٹرانسمیشن سیکشنوں اور 13 ڈسٹری بیوشن ریجنوں میں تعینات ہے۔
اعدادوشمار (Statistical Data)
کروژن کنٹرول ڈیپارٹمنٹ گیس ٹرانسمیشن اور ڈسٹری بیوشن کی زیِر زمین پائپ لائن کو زنگ اور کیمیائی تحلیل سے محفوظ رکھنے کی پیش بندی اور حفاظتی اقدامات کرنے مین مصروف ہے۔ زیِر زمین پائپ لائنوں کو زنگ اور کیمیائی تحلیل سے بچانے کے لیے کیتھوڈک پروٹکشن کی تکنیک استعمال کی جاتی ہے جس کو روبہ عمل میں لانے کے لیے 1561 سی پی (CP) سٹیشن قائم کیے گئے ہیں جو 69139 کلومیٹر ڈسٹری بیوشن کی مائلڈ سٹیل پائپ لائنز اور 7756 کلومیٹر ٹرانسمیشن پائپ لائن کو محفوظ بناتے ہیں۔ تمام زیِر زمین پائپ لائن نیٹ ورک کی جانچ پڑتال کی لیے 32987 ٹیسٹ پوائنٹس قائم کیے گئے ہیں جن کا سال میں دو مرتبہ معائنہ کیا جاتا ہے۔ اِن تمام زیِر زمین پائپ لائنز کی کیتھوڈک پروٹکشن کا ڈیٹا ایک ڈیٹابیس سیل میں محفوظ کیا جاتا ہے جو کروژن کنٹرول سینٹر میں قائم ہے۔
بنیادی افعال (Core Functions)
کروژن کنٹرول ڈیپارٹمنٹ کو مندرجہ ذیل بنیادی مقاصد کے تحت قائم کیا گیا ہے۔
 
1- ڈیزائن اور تعمیرات (Design and Construction)
تمام نئی پائپ لائنوں کی حفاظت کرنے کے لیے ابتدائی انجنئیرنگ ڈیزائن کرنا اور نئے سی پی سسٹم کی تعمیر، تنصیب اور کمیشنگ کرنا۔
ادارے کی اپنی ضروریات کے مطابق ائرکول ٹرانسفارمرز ریکٹیفائر یونٹس (TRUs) تیار کرنا جس کے لیے ایک مکمل ورکشاپ کروژن کنٹرول سینٹر میں قائم کی گئی ہے۔
ٹرانسمیشن اور ڈسٹری بیوشن کی کوٹنگ میں استعمال ہونے والے تھرموگلاس (Outer Wrap) کو پلانٹ پر تیار کرنا اور ادارے کی ضروریات کو مدِ نظر رکھتے ہوئے سٹاک موجود رکھنا۔
ادارے میں استعمال ہونے والے کوٹنگ میٹیریل اور سی پی میٹیریل کو لیبارٹری میں ٹیسٹ کرنا اور عالمی معیار پر اِن کی جانچ پڑتال کرنا۔


2- جانچ پڑتال اور دیکھ بھال (Monitoring and Maintenance)
سی پی (CP) سسٹم اور پائپ لائنوں کی جانچ پڑتال کرنے کے لیے سال میں دو مرتبہ (PSP) سروے کرنا۔
پندرہ روزہ بنیادوں پر تمام 1561 سی پی (CP) سٹیشنوں کی دیکھ بھال کرنا اور ان میں موجود نقائص کو دور کرنا اور سسٹم کو بلا روک روبہ عمل رکھنا۔
نئی اور پرانی ٹرانسمیشن اور ڈسٹری بیوشن پائپ لائنون کی کوٹنگ کی جانچ پڑتال کے لیے (DCVG) سروے اور دیگر سروے کرنا۔
ٹرانسمیشن اور ڈسٹری بیوشن لائنوں پر تنصیب کیے گئے سی پی (CP) سسٹم کی مخصوص دورانیئےکے بعد ٹیکنیکل آڈٹ کرنا۔
Standard NACE کی بنیاد پر پائپ لائنوں کو بیرونی زنگ اور تحلیل کے خطرے کا پتہ لگانے کیلئے پائپ لائن کی سالمیت کی تشخیص کا بندوبست کرنا۔
ٹی۔آر یونٹ اور سی۔پی۔ آلات کی مرمت، calibration اور تصحیح کرنا۔
 

3- حمایتی افعال (Supporting Functions)

ا) زیر زمین گیس لیک کو دریافت کرنا:
کروژن کنٹرول ڈیپارٹمنٹ گیس کے ضیاع کو کم کرنے اور یو-ایف-جی (UFG) کو گھٹانے کیلئے میدان عمل مین سرگرم ہے۔ گیس کے نقصان کو دریافت کرنے کیلئے Laser Based Leak Detectors استعمال کئے جاتے ہیں۔ UFG Reduction Plan کے تحت اب تک 67042 کلومیٹر نیٹ ورک کا سروے کیا گیا ہے۔ جس کے نتیجے میں 158904 زیر زمین لیک دریافت کئے گئے ہیں اور 113391 کو مرمت کر کے UFG نقصان کو روکا گیا ہے۔
  
ب)کوٹ اینڈ ریپ سیکشن (Coat and Wrap Section) :
ٹرانسمیشن سیکشن (Transmission Section)

زیر زمین ٹرانسمیشن پائپ لائنوں کے پرانے اور زنگ آلود حصوں کو دوبارہ کوٹنگ کر کے مزید خطرے سے دور کرنا بھی کروژن کنٹرول ڈیپارٹمنٹ کی ذمہ داری ہے۔ اس مد میں گزشیہ سال 8٫5646 کلومیٹر پائپ لائنز کی کھدائی کرکے دوبارہ کوٹنگ کی گئی ہے۔
ج)ڈسٹری بیوشن شیکشن (Distribution Section)
ڈسٹری بیوشن کی پرانی اور زنگ آلود پائپ لائنوں کو دوبارہ کوٹنگ کرنا بھی کروژن کنٹرول کی ذمہ داری ہے، اس سلسلے میں 12٫048 کلومیٹر پائپ لائنوں کو منتخب کیا گیا ہے، جس کیلئے کوٹنگ میٹیریل اور دیگر اقدامات کئے جارہے ہیں۔

4- طویل مدتی مقاصد

ا) سی-پی- سسٹم کی ریموٹ پڑتال کرنا:
ہماری پائپ لائنز پر تعمیر کئے گئے سپ-پی- سٹیشن ملک کے طول و عرض میں پھیلے ہوئے ہیں۔ جن کی جانچ پڑتال کرنے کے لئے عملے کو دور دراز کے علاقوں میں سفر کرنا پڑتا ہے اور اگر سسٹم میں کوئی خرابی یا نقصان پیدا ہو جائے تو وہ عملے کے دورے پر ہی معلوم ہوتا ہے۔ اس کمی پر قابو پانے کے لئے سی-پی۔ سٹیشن کو ٹیلی مواصلات کی مدد سے جانچا جاتا ہے۔ اسی تکنیک کو استعمال میں لاتے ہوئے ٹرانسمیشن لائنوں پر تنصیب شدہ 30 سی-پی۔ سٹیشن کا ڈیٹا SCADA کے ذریعے سے مونیٹر کیا جا رہا ہے۔ اس کے علاوہ ایک عدد پائیلٹ پروجیکٹ کے تحت اسلام آباد میں 8 سی۔پی۔ سٹیشن کو جی۔ ایس۔ایم (GSM) ٹیکنالوجی کی مدد سے مونیٹر کرنے کیلئے تنصیب کا عمل جاری ہے۔ مزید سی۔پی۔ سٹیشن پر سسٹم کی تنصیب کے لئے ابتدائی اقدامات کیے جا رہے ہیں۔
ب) سی۔پی۔ سسٹم کو بغیر رکاوٹ روبہ عمل رکھنے کے لئے متبادل ذرائع توانائی:
ہمارے زیرزمین پائپ لائن نیٹ ورک کو بلا رکاوٹ کیتھوڈک پروٹیکشن فراہم کرنا ہماری اولین ترجیحات میں شامل ہے۔ اس نظریے کو عملی جامہ پہنانے کے لئے ہم مندرجہ ذیل متبادل ذرائع توانائی استعمال کر رہے ہیں۔
i) تھرموالیکٹرک جنریٹر (TEG)
ii) شمسی توانائی
iii) بیٹری بیک اپ سسٹم
مندرجہ بالا ذرائع کو استعمال کرتے ہوئے ہم نے اپنے 70% ٹرانسمیشن لائنوں کے سی۔پی۔ سسٹم کو بلا رکاوٹ سپلائی فراہم کر دی ہے۔ جبکہ باقی ماندہ ٹرانسمیشن اور ڈسٹری بیوشن کے سسٹم پر کام جاری ہے۔
ج) پائپ لائن کی سالمیت کی تشخیص :
ہائی پریشر ٹرانسمیشن پائپ لائنز کے آپریشن کو محفوظ اور یقینی بنانا ہماری اولین ترجیح میں شامل ہے۔ اس تمام عمل کو موئثر اور سالمیت کی بنیاد پر اطمینان کرنا ضروری ہے۔ اس سلسلے میں ASME B31.8S کا سٹینڈرڈ واضع ہدایات اور اقدامات فراہم کرتا ہے۔ اس تمام سسٹم کو پائپ لائن کی سالمیت کے انتظام کے تحت عمل درآمد کیا جا رہا ہے۔ PIMP کا سوفٹ وئیر تیار کیا جا رہا ہے اور فیلڈ میں اس کے سروے کئے جا رہے ہیں تا کہ سسٹم کے آپریشن کو بغیر کسی رکاوٹ اور نقصان کے جاری رکھا جا سکے۔

Updated: 23-06-2015